All posts by admin

اندرونی وبیرونی دشمن زبانوں کو لگام دیں, وزیراعلیٰ کا دبنگ اعلان

لاہور (اپنے سٹاف رپورٹر سے) وزےراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشرےف نے کہا ہے کہ پاکستان اور چین عظیم ہمسائے ہیں اور دونوں ممالک کی دوستی لازوال ہے اور اقوام عالم میں پاک چین دوستی کی کوئی مثال نہیں ملتی یہ ہر دباﺅ سے مبرا او رشرائط سے پاک ہے اور وقت کی ہر آزمائش پر پورا اتری ہے ۔ جنگ ہو یا امن یا کوئی قدرتی آفت، چین ہمیشہ پاکستان کے ساتھ کھڑا رہا ہے۔چین نے اقوام متحدہ سمیت دیگر عالمی فورمز پر ہمیشہ پاکستان کے موقف کی تائید کی ہے۔ چین پہلے دن سے ہی پاکستان سے دوستی کا حق نبھا رہا ہے اور گزشتہ 70 سالوں میں چین نے پاکستان کو متعدد منصوبوں کے بڑے تحفے دیئے ہیں۔سی پیک بھی چینی قیادت اور حکومت کا پاکستان کیلئے عظیم تحفہ ہے جس پر پاکستان کی حکومت اور عوام سی پیک کے تحفے پر چین کے شکرگزار ہیں۔ چائنہ پاکستان اکنامک کوریڈور پر تیز رفتاری سے عملدرآمد ہو رہا ہے لیکن سی پیک کے اندرونی و بیرونی مخالفین اس گیم چینجر منصوبے پر تیزی سے عملدرآمد سے خوف زدہ ہیں اور حسد کی آگ میں جل رہے ہیں،سی پیک پر تنقید کرنے والے پاکستان میں ترقی او رخوشحالی کے خوف میں مبتلا ہیں-مشرقی سرحد پر ہمارا ہمسایہ اور بعض دیگر ممالک کی نیندیں حرام ہوچکی ہیں لیکن سی پیک اپنی شفافیت اور تیز رفتاری سے ان مخالفین کو بھرپور جواب دے رہاہے۔ خطے کی ترقی کے ضامن عظیم منصوبے سی پیک کے مخالفین اپنی زبانوں کو لگام دیں اور منہ بند رکھیں۔ دشمن سن لے ،ہم ملکرپاکستان اور خطے کی ترقی و خوشحالی کے ضامن اس منصوبے کو ہر قیمت پر کامیاب بنائیں گے۔انشاءاللہ سی پیک کا منصوبہ مکمل ہوگا اور پاکستان ترقی و خوشحالی کا سفر ضرور طے کرے گا اور ہمسایہ ممالک سے معاشی جنگ جیتیں گے۔ وزیراعلیٰ محمد شہبازشریف نے ان خیالات کا اظہار آج مقامی ہوٹل میں پنجاب۔ جیانگ ژی بزنس فورم 2017 سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ پنجاب۔جیانگ ژی بزنس فورم کے دوران دونوں صوبوں کے مابین معاشی تعاون کے معاہدے پر دستخط ہوئے۔ دونوں صوبوں کے صنعتکاروں کے مابین بھی دو طرفہ تعاون کے معاہدوں پر دستخط کئے گئے۔ ممبر سنٹرل کمیٹی کمیونسٹ پارٹی آف چائنہ لوشنشے، چینی وفد کے اراکین، چینی قونصل جنرل لانگ ڈنگ بن،صوبائی وزرائ، اراکین قومی و صوبائی اسمبلی، پاکستان بالخصوص پنجاب اور چینی صوبے جیانگ ژی کے سرمایہ کاروں نے بزنس فورم میں شرکت کی۔ وزیراعلیٰ محمد شہبازشریف نے پنجاب۔ جیانگ ژی بزنس فورم سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ہم جیانگ ژی صوبے کے اعلیٰ سطح کے وفد اور بزنس لیڈرزکی پنجاب کے تاریخی شہر لاہور میں آمد کا خیرمقدم کرتے ہیں۔ بزنس فورم کا انعقاد خوش آئند ہے اور اس بزنس فورم کے ذریعے پنجاب اور چینی صوبے جیانگ ژی کے مابین معاشی تعاون بڑھانے کے حوالے سے سودمند تجاویز سامنے آئیں گی۔ انہوں نے کہا کہ بزنس فورم کے دوران دونوں صوبو ںکے مابین معاشی تعاون بڑھانے کیلئے طے پانے والا معاہدہ خوش آئند ہے اور دونوں صوبوں کے بزنس مینوں کے مابین تعاون کے معاہدے بھی ایک مثبت پیشرفت ہے جس سے یقینا نہ صرف دونوں صوبوں بلکہ پاکستان اور چین کے معاشی تعلقات میں بھی اضافہ ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان اور چین کی دوستی دنیا بھر میں بے مثال ہے اور یہ دوستی آزمائش کی ہر گھڑی میں پورا اتری ہے۔ انہوں نے کہا کہ کہا جاتا ہے کہ پاکستان اور چین کی دوستی ہمالیہ سے بلند، شہید سے میٹھی، سمندر سے گہری اور فولاد سے زیادہ مضبوط ہے۔ چین نے اس قول کو سچ ثابت کر دکھایا ہے۔ انہوں نے کہا کہ وزیراعظم نوازشریف نے 2013 کے انتخابات میں عوام کے تاریخی مینڈیٹ ملنے کے بعد چین کی قیادت کی دعوت پر چین کا دورہ کیا اور اسدورے کے دوران میں بھی وزیراعظم کے وفد میں شامل تھا۔ چین کی قیادت نے اس دورے کے دوران پاکستان میں توانائی بحران کے خاتمے سمیت دیگر شعبوں میں ہرممکن تعاون کی یقین دہانی کرائی۔ چین نے سی پیک کے تحت پاکستان میں 60 ارب ڈالر کی سرمایہ کاری کا تحفہ دیا جس میں اربوں ڈالر توانائی کے منصوبوں پر لگ رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ چین کی عظیم سرمایہ کاری کے باعث پاکستان میں انفراسٹرکچر، ٹرانسپورٹ اوردیگر شعبوں میں منصوبے لگ رہے ہیں جبکہ چین نے پشاورسے کراچی تک ریلوے لائن کا منصوبہ بھی بنایا ہے- بدقسمتی سے ملک و قوم کی ترقی کے مخالفین نے سی پیک کے منصوبے کو بلاجواز تنقید کا نشانہ بنایا لیکن چین نے تمام تر تنقید کے باوجود پاکستان کے ساتھ تعاون جاری رکھ کر دوستی کا حق نبھایا ہے۔چین کی سی پیک کے تحت پاکستان میں 60 ارب ڈالر کی سرمایہ کاری ہو رہی ہے جس کے تحت انفراسٹرکچر، ٹرانسپورٹ، موٹروے اور توانائی کے منصوبے لگ رہے ہیں۔ اب اس میں پشاور سے لے کر کراچی تک ریلوے لائن کا منصوبہ بھی شامل ہوا ہے۔ انہوں نے کہا کہ توانائی منصوبو ںکی تکمیل سے اس سال کے آخر تک توانائی کا بحران ختم ہو جائے گا اور ملک کی صنعت، زراعت، لائیوسٹاک اور دیگر شعبوں کیلئے وافر بجلی دستیاب ہوگی۔ انہو ںنے کہا کہ اگلے ماہ 1320 میگاواٹ کے ساہیوال کول پاور پلانٹ کا افتتاح کیا جا رہا ہے اور یہ منصوبہ ریکارڈ مدت میں مکمل ہونے جا رہا ہے۔ اس منصوبے نے کم مدت میں تکمیل کے حوالے سے چین کا بھی ریکارڈ توڑ دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ 250 طلبا و طالبات بیجنگ یونیورسٹی میں پنجاب حکومت کے اخراجات پر چینی زبان سیکھ رہے ہیں۔یہ طلبا و طالبات وطن واپس آ کر بیجنگ۔اسلام آباد، بیجنگ۔لاہور اور بیجنگ و دیگر صوبوں کے مابین پل کا کردار ادا کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ نوجوان ہمارا مستقبل ہیں اور ملک کی ترقی و خوشحالی کے ضامن ہیں اور انہیں جدید علوم سے آراستہ کرنے کیلئے وسائل کی فراہمی سودمند سرمایہ کاری ہے۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ پنجاب اور چین کا صوبہ جیانگ ژی ترقی و خوشحالی کے سفر میں عظیم پارٹنر بنیں گے۔دونوں صوبوں کے مابین تعلیم، صنعت، توانائی، لائیوسٹاک، زراعت، فارما سوٹیکل اور دیگر شعبوں میں تعاون کو فروغ دیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ پنجاب میں مختلف شعبوں میں سرمایہ کاری کی بڑی گنجائش موجود ہے، چینی سرمایہ کار پنجاب میں انڈسٹریل پارک کے منصوبے میں سرمایہ کاری کرسکتے ہیں۔ ٹیکسٹائل سیکٹر بھی اہم شعبہ ہے اور اس شعبے میں بھی سرمایہ کاری کی بڑی گنجائش موجود ہے۔ فارما سوٹیکل اور مینوفیکچرنگ کے شعبوں میں بھی تعاون بڑھایا جاسکتا ہے۔ ہم آپ کے ساتھ مل کر کام کرنا چاہتے ہیں اور باہمی اشتراک سے دونوں ممالک کے معاشی تعلقات پر مثبت اثرات مرتب ہوں گے۔ ممبر سنٹرل کمیٹی کمیونسٹ پارٹی آف چائنہ، لوشنشے (Mr. Lu Xinshe) نے بزنس فورم سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ جیانگ ژی اور پنجاب کے درمیان معاشی تعلقات کو تیز رفتاری سے آگے بڑھانا ہے اور دونوں صوبو ںکے مابین زراعت، صنعت، توانائی اور دیگر شعبوں میں اس طرح کے اشتراک کار کے وسیع امکانات موجود ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پنجاب اور جیانگ ژی دونوں زرعی صوبے ہیں اور زراعت کے شعبے میں ایک دوسرے کے تجربات سے فائدہ اٹھا سکتے ہیں۔ جیانگ ژی اور پنجاب کے مابین صنعت کے شعبہ میں بھی تعاون بڑھایا جاسکتا ہے۔ دونوں صوبو ںکے مابین زراعت، تعلیم، صنعت، سیاحت، توانائی اور دیگر شعبوں میں تعاون کو فروغ دینے سے دونوں صوبوں کے عوام کو فائدہ پہنچے گا۔ انہوں نے کہا کہ یہ میرا پاکستان کا پہلا دورہ ہے اور میں جہاں بھی گیا ہوں بے پناہ محبت اور پیار ملا ہے۔میں پنجاب کے عوام کی مہمان نوازی، فراخدلی اور خلوص کو فراموش نہیں کرسکتا۔انہوں نے کہاکہ پنجاب نے وزیراعلی شہبازشریف کی بہترین لیڈر شپ میں غیر معمولی ترقی کی ہے اور منصوبوں کو انتہائی تیزی سے مکمل کر کے شہبازشریف نے اپنی صلاحیتوں کا لوہا منوا یا ہے او رپنجاب میں منصوبوں کی تیز رفتار تکمیل کے حوالے سے ”پنجاب سپیڈ “کا ذکر ہر جگہ ہو رہا ہے- شہبازشریف اور ان کی ٹیم نے انتھک محنت سے بے شمار کامیابیاں حاصل کی ہیں جس طرح پنجاب ترقی کرر ہاہے اسی طرح ہمارا صوبہ جیانگ ژی بھی تیزی سے ترقی کررہاہے-انہوںنے کہاکہ وزیراعلی پنجاب محمد شہبازشریف نے سی پیک کے منصوبوں کے ساتھ دیگر منصوبوں کو بھی انتہائی تیزی کےساتھ آگے بڑھایا ہے اور وہ پاکستان کے مقبول ترین رہنما ہےں جنہوں نے عملی طو رپر کام کر کے دکھایا ہے اور حقیقی معنوں میں ترقی کے مینار قائم کئے ہیں-انہوںنے اس موقع پر کہاکہ پنجاب اور جیانگ ژی کے مابین معاشی، تجارتی اور باہمی تعلقات کو فروغ دینے کا یہ سنہرا موقع ہے کیونکہ وقت بھی صحیح ہے ،مقام بھی صحیح ہے اور شہبازشریف کی صورت میں رہنما بھی صحیح ہیں-انہوںنے کہا کہ وقت اس لئے صحیح ہے کہ سی پیک اور ون بیلٹ ون روڈ کے منصوبوں پر کام ہورہاہے-مقام اس لئے صحیح ہے کہ پنجاب پاکستان کا سب سے ترقی یافتہ صوبہ ہے اور رہنما اس لئے کہ وہ شہبازشریف کی شکل میں ہمارے سامنے موجود ہیں جنہوںنے پنجاب میں منصوبوں میں معیار اور رفتار کے نئے ٹرینڈ سیٹ کئے ہیں-انہوں نے کہاکہ دونوں صوبوں کے مابین طے پانے والے معاہدوں سے دو طرفہ معاشی تعاون فروغ پائے گا۔ صوبائی خزانہ ڈاکٹر عائشہ غوث پاشا اور جیانگ ژی کے ڈائریکٹر جنرل کامرس وینگ شوئی پنگ (Mr.Wang Shui Ping ) نے بھی بزنس فورم سے خطاب کیا۔ وزےراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشرےف سے ہوٹل میں کمیونسٹ پارٹی آف چائنہ کی سنٹرل کمیٹی کے رکن اور چینی صوبے (Jiangxi) جیانگ ژی کے پارٹی سیکرٹری لو شنشے (Mr. Lu Xinshe) نے ملاقات کی۔ ملاقات میں باہمی دلچسپی کے امور، پنجاب اور جیانگ ژی کے مابین تعاون کو فروغ دینے اور کمیونسٹ پارٹی اور مسلم لیگ (ن) کے مابین روابط بڑھانے کے حوالے سے تبادلہ خیال کیا گیا۔کمیونسٹ پارٹی آف چائنہ کی سنٹرل کمیٹی کے رکن اور چینی صوبے جیانگ ژی کے پارٹی سیکرٹری لو شنشے نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ صوبہ پنجاب کی تیز رفتار ترقی میں وزیر اعلیٰ شہباز شریف کانمایاں کردار ہے۔شہباز شریف کی ولولہ انگیز قیادت میں پنجاب میں تیزی سے منصوبے مکمل کئے گئے ہیں اور بلاشبہ وزیر اعلیٰ پنجاب ایک پرعزم اور وژنری لیڈر ہیں۔ شہباز شریف کی قیادت میں پنجاب نے حقیقی معنوں میں ترقی کی ہے اور وزیر اعلیٰ کی غیرمعمولی صلاحیتوں کو پاکستان کے علاوہ چین میں بھی سراہا جاتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان میں اس وقت وزیر اعلیٰ پنجاب ایسی شخصیت ہیں جنہوں نے پاک چین تعلقات بڑھانے میں نمایاں کردار ادا کیا ہے۔ شہبازشریف پاکستان خصوصاً پنجاب کی تعمیر و ترقی کے معمار ہیں اور انہوں نے عوام کی ترقی اور خوشحالی کیلئے عملی طو رپر کام کرکے دکھایا ہے۔انہوں نے کہا کہ پنجاب اور جیانگ ژی کے مابین تعلقات بڑھانے کا یہ سنہرا موقع ہے کیونکہ درست وقت ، درست مقام اور درست رہنماموجود ہیں۔درست وقت سی پیک اور ون بیلٹ ون روڈ کی صورت میں موجود ہے۔ جبکہ درست مقام پنجاب جوکہ پاکستان کا سب سے ترقی یافتہ صوبہ ہے کی صورت میں ہمارے سامنے ہے اور درست رہنما وزیراعلیٰ شہباز شریف کی قیادت میں موجود ہیں اور یہ ہی پائیدار ترقی اور خوشحالی کے سفر میں اہم کردار ادا کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ صوبہ پنجاب کے ساتھ مختلف شعبوں میں تعاون بڑھائیں گے اور دونوں صوبائی حکومتوں کے مابین اشتراک بڑھانے کیلئے تیزی سے اقدامات اٹھائیں گے۔ انہوں نے پاکستان مسلم لیگ (ن) کے وفد کو چین کے دورے کی دعوت بھی دی۔انہوں نے کہا کہ اس دورے سے کمیونسٹ پارٹی آف چائنہ اور پاکستان مسلم لیگ (ن) کے درمیان روابط بڑھیں گے۔اس موقع پر وزیر اعلیٰ پنجاب محمد شہباز شریف نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ چین پاکستان کی ترقی و خوشحالی کے سفر کا عظیم ساتھی ہے۔سی پیک پاکستان کی ترقی کا ضامن ہے۔چین نے کمیونسٹ پارٹی کی عظیم قیادت میں ترقی کی منازل طے کی ہیں اوراقوام عالم کیلئے چین کی ترقی رول ماڈل ہے۔وزیر اعلیٰ نے کہا کہ وزیراعظم محمد نوازشریف کے دور میں پاک چین تعلقات نئی بلندیوں کو چھو رہے ہیں۔پنجاب اورچینی صوبے جیانگ ژی کے مابین تعلقات کو فروغ دینے کیلئے فوری اقدامات کریں گے۔انہوں نے کہا کہ یہ وقت معاشی تعاون بڑھانے کا ہے۔سی پیک کے ساتھ ساتھ دیگر شعبوں میں بھی اشتراک میں اضافہ کرنا ہوگا۔وزیر اعلیٰ نے کہا کہ مسلم لیگ (ن) اور کمیونسٹ پارٹی آف چائنہ کے درمیان بڑھتا ہوا تعاون دونوں پارٹیوں کی قیادت میں قریبی راوبط کا مظہر ہے۔چین کے قونصل جنرل لانگ ڈنگ بن، چینی وفد کے اراکین، صوبائی وزراءشیر علی خان، عائشہ غوث پاشا، نعیم اختر بھابھہ، ایم این اے پرویز ملک، مشیر عمر سیف، مسلم لیگ (ن) کے سینئر خواجہ احمد حسان اور اعلیٰ حکام اس موقع پر موجود تھے۔ وزیر اعلیٰ پنجاب محمد شہباز شریف نے ڈائریکٹر جنرل اوور سیز پاکستانیز کمیشن، پنجاب سید جاوید اقبال بخاری کی صاحبزادی کے انتقال پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کیا ہے۔ وزیراعلیٰ نے اپنے تعزیتی پیغام میں سوگوار خاندان سے ہمدردی اور تعزیت کا اظہار کرتے ہوئے دعا کی کہ اللہ تعالیٰ مرحومہ کی روح کو جوار رحمت میں جگہ دے اور سوگوار خاندان کو صبر جمیل عطا فرمائے۔

سندھ کابینہ کا رینجرز اختیارات بارے بڑا فیصلہ, پولیس والوں کیلئے بھی خوشخبری

کراچی (نمائندہ خصوصی)سند ھ کابینہ نے رینجرز کو ATAکے تحت 90 دن کےلئے اختیارات دینے کی منظوری دے دی ہے اور کابینہ نے سندھ پولیس کی صلاحیتوں کو بڑھانے کا بھی فیصلہ کیا ہے یہ منظور ی وزیراعلیٰ ہاﺅس میں سندھ کابینہ کے اجلاس میں دی گئی جس کی صدارت وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ کر رہے تھے۔اجلاس میں صوبائی وزراء ، معاونین خصوصی، تمام متعلقہ سیکریٹریوں سمیت دیگر افسران نے شرکت کی۔ سندھ کابینہ نے بجٹ اسٹریٹیجی پیپر2017-20 پر بحث کی سیکریٹری خزانہ حسن نقوی نے کابینہ کو بریفنگ د یتے ہوئے بتایا کہ بجٹ اسٹریٹجی پیپر 2017-20کے دستاویز محکمہ خزانہ اور محکمہ منصوبہ بندی و ترقیات نے مل کر بنایا ہے ۔ پیپر میں حکومتی پالیسی ، ترجیحات ، اسٹریٹجک ریسورسز کا تخمینہ شامل ہے بعد میں کابینہ نے بجٹ اسٹرٹیجی پیپر 2017-20 منظور کر لیا ۔ وزیراعلیٰ سندھ نے کابینہ کو بتایا کہ رواں مالی سال 2016-17 میں سندھ حکومت کا کل ریوینیو 739.3 بلین روپے تھا جس میں وفاقی ٹرانسفرز 518بلین روپے جبکہ ریوینیو اسائنمنٹ 425بلین روپے ہے اور ڈائریکٹ ٹرانسفر63.6بلین روپے ، ڈیولپمنٹ گرانٹ 16.7بلین روپے ، OZT 12.6بلین روپے شامل ہیں صوبائی رسیدیں 132.8بلین روپے ہیں، سروسس پر سیلز ٹیکس 61.5بلین روپے ہے ، دیگر ٹیکس رسیدیں 61.2بلین روپے اور نان ٹیکس ریوینیو 10.1بلین روپے ہے۔ وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کابینہ کو NFC ایوارڈ سے متعلق بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ این ایف سی ایوارڈ فارمولہ چار چیزوں پر مشتمل ہے (a)آبادی کو 82فیصداہمیت ہے،(b) جبکہ غربت کی سطح 10.3فیصد،(c) ریوینیو جنریشن کو 5فیصد اور (d) انورس پاپولیشن ڈینسٹی کو 2.7فیصد اہمیت ہے۔ اس طرح پنجاب کا شیئر 51.74فیصد‘ سندھ کا 24.55 فیصد ، کے پی کے کا 14.62فیصد اور بلوچستان کا 9.09فیصد ہے۔ سیکریٹری داخلہ قاضی شاہد پر ویز نے کابینہ کو بریفنگ د یتے ہوئے بتایا کہ رینجرز کو وفاقی حکومت نے سندھ حکومت کی درخواست پر آرٹیکل 147کے تحت تعینات کیا ہے جس کےلئے SOPsمحکمہ داخلہ نے منظورکیا ہے رینجرز 1989سے سندھ میں اپنی فرائض انجام دے رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ رینجرز آرٹیکل 147 کے تحت 01.08.2016 سے تعینات ہے جو 19جولائی ،ئ2017 تک ہے ،2 فروری ،2010 کو رینجرز کو ATAسیکشن – 4 کے اختیارات دئیے گئے تھے۔ اس موقع پر وزیراعلی ٰسندھ سید مراد علی شاہ نے کہا کہ یہ اختیارات 90دن کےلئے دئیے گئے تھے جو اپریل 16،2017 کو ختم ہو گئے ہیں۔ وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا کہ رینجرز نے عسکری ونگز ، بھتہ خوروں اور ٹارگٹ کلرز کے خلاف اچھا کام کیا ،کراچی میں ٹارگٹڈ آپریشن سے اچھے نتائج سامنے آئے انہوں نے کہا کہ اس وقت پولیس کی کارکردگی بھی بہتر ہے اور حکومت کوشش کرر ہی ہے کہ پولیس کی کارکردگی کو مزید بہتر کرے حکومت پولیس کی خصوصی تربیت فراہم کرنے پر بھی توجہ دے رہی ہے۔سندھ کابینہ کے اجلاس میں صو بائی وزراءنثار کھوڑو ، منظور وسان ، میر ہزار خان بجارانی ، سید سردار شاہ، جام مہتاب ڈہر ، جام خان شورو نے رینجرز کو اختیارات دینے کی ہمایت کی۔

سوناکشی سنہا کی فلم ”نور“ آج ریلیز ہو گی

کراچی (شوبز ڈیسک)سوناکشی سنہا کی فلم ”نور“ آج ریلیز ہو گی۔پاکستانی ناول کراچی یو آر کلنگ می پر مبنی بالی ووڈکی نئی فلم نورآج سے سینما گھروں میں ریلیز ہو گی۔فلم میں بالی ووڈ کی دبنگ گرل سوناکشی سنہا اپنے مداحوں کو صحافی کے روپ میں نظر آئیں گی ۔ سن 2014میں شائع ہونے والے ناول کراچی یو آر کلنگ می کی کہانی ایک خاتون صحافی کے گرد گھومتی ہے۔ سنہیل سپی کی ہدایتکاری میں بننے والی ڈرامہ فلمنور میں سوناکشی سنہا نور نامی صحافی کے مرکزی کردار ادا کریں گی جو بھارتی شہر ممبئی سے تعلق رکھتی ہے ۔

کرپشن الزامات۔۔پی آئی اے کے قائم مقام سی ای او برطرف

کراچی(ویب ڈیسک) قومی ایئر لائن (پی آئی اے) کے قائم مقام چیف ایگزیکٹو آفیسر (سی ای او) برنڈ ہلڈن برانڈ کو ان کے عہدے سے برطرف کر دیا گیا، ان کی جگہ نیئرحیات قائم مقام سی ای او کی ذمہ داری نبھائیں گے۔ذرائع کے مطابق جرمن شہری برنڈ ہلڈن برانڈ کو مختلف الزامات کا سامنا ہے، ان پر الزام ہے کہ انہوں نے اپنے عہدے کا غلط استعمال کیا، قومی ایئرلائن کو نقصان پہینچایا اور ایئرلائن کے طیاروں کو طریقہ کار کی پیروی کیے بغیر کم قیمت میں فروخت کیا۔ذرائع کا یہ بھی کہنا ہے کہ فیڈرل انویسٹی گیشن ایجنسی (ایف آئی اے) سمیت دیگر تحقیقاتی ایجنسیاں برنڈ ہلڈن برانڈ کے خلاف لگائے جانے والے الزامات کی تحقیقات کر رہی ہیں، اس سے قبل سابق سی ای او کا نام ایگزٹ کنٹرول لسٹ (ای سی ایل) میں بھی شامل کردیا گیا تھا۔

سندھ کابینہ نے 90روز کیلئے رینجرز کو خصوصی اختیارات دینے کی منظوری دیدی

کراچی(ویب ڈیسک)سندھ کابینہ نے رینجرز کو حاصل خصوصی اختیارات میں 90 روز کی توسیع کی منظوری دے دی۔تفصیلات کے مطابق رینجرز خصوصی اختیارات کے تحت ملزمان کوگرفتار کرکے تحقیقات کرسکے گی۔وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ کی سربراہی میں ہونے والے سندھ کابینہ کے اجلاس میں رینجرز کو انسداد دہشت گردی ایکٹ کے تحت خصوصی اختیارات دینے کا فیصلہ کیا گیا۔اجلاس میں پولیس کی صلاحیت بڑھانے کا بھی فیصلہ کیا گیا جبکہ مراد علی شاہ نے کہا کہ حکومت پولیس کی خصوصی تربیت پر توجہ دے رہی ہے اور کوشش کررہی ہے کہ پولیس کی کی کارکردگی کو مزید بہتر کرے۔


sindh rangers by channel5tv

شعیب ملک نے ثانیہ مرزا کیلئے قربانی دیدی

لاہور (ویب ڈیسک) بھارتی ٹینس سٹار ثانیہ مرزااپنی پروفیشنل مصروفیات کے سبب عموماً اپنے شوہر اور پاکستان کے سابق کپتان شعیب ملک سے دوررہتی ہیں لیکن مصروف شیڈول سے فرصت پاتے ہی انہوں نے شعیب ملک کو وقت دیدیا ہے۔کھیلوں کی دنیا کی یہ مشہور جوڑی اب دبئی میں ایک وقت وقت گزارنے کیلئے دبئی میں یکجاہوگئی ہے اور اپنی بیگم کے ساتھ وقت گزارنے کے لیے شعیب ملک کو پاکستان کپ کے میچوں کی قربانی دینا پڑی ہے۔انہوں نے ایونٹ کے پہلے دونوں میچوں میں اپنی ٹیم خیبرپختونخوا کیلئے شاندار کارکردگی دکھاتے ہوئے فیڈرل ایریاکےخلاف 72اور پنجاب کے خلاف ناقابل شکست80رنزبنائے تھے تاہم دبئی جانے کے سبب شعیب ملک آج بلوچستان کے خلاف میچ نہیں کھیلیں گے جبکہ 25اپریل کوسندھ کے خلاف میچ میں بھی ان کی شرکت یقینی نہیں ہے۔ اس بات کا قوی امکان موجود ہے کہ خیبرپختونخواکے فائنل پہنچنے کی صورت میں وہ شاید وطن واپس آجائیں۔

ڈی آئی جی پشاور کے بیٹے کے قتل کی تحقیقات میں اہم پیش رفت

کراچی(ویب ڈیسک)کراچی میں خیبرپختونخوا میں تعینات ڈی آئی جی پشاور کے بیٹے کے قتل کی تحقیقات میں پیش رفت ہوئی ہے۔ملزم فقیرمحمد نے قتل کے لئے رسی اور دستانے پہلے سے خرید رکھے تھے۔ذرائع کے مطابق ملزم نے مقتول عمیرشہاب کی والدہ کوبھی قتل کرنے کی کوشش کی۔ڈی آئی جی کی اہلیہ کے کمرے کے سوئچ بورڈ پر خون کے نشان ہیں۔ایس پی کلفٹن اسد ملہی نے مقتول کے دیگر اہلخانہ پرقاتلانہ حملے کی تردید کی ہے۔پولیس نے ملزم کو گرفتار کر کے آلہ قتل قبضے میں لے لیا۔قتل کی مزید تحقیقات جاری ہیں۔تحقیقاتی ذرائع کے مطابق ملزم فقیر محمد چھ ماہ کے لیے ڈی آئی جی پشاور کے بنگلے پر تعینات ہوا تھا۔گزشتہ شب فقیر محمد کی آخری ڈیوٹی تھی، صبح اسے کشمور روانہ ہوجانا تھا۔ واردات رات 12بجے کے بعد ہوئی ہے۔
اس سے قبل….
کراچی(ویب ڈیسک) کراچی میں ڈی آئی جی پشاور شہاب مظہر کا بیٹا عمر شہاب اپنے ہی محافظ کے ہاتھوں قتل ہو گیا،پولیس کا کہنا ہے کہ ملزم فقیر محمد نے دو لاکھ روپے کا تقا ضا کیا تھا،انکار پر عمر شہاب کو قتل کر دیا،ملزم نے اعتراف جرم بھی کر لیا ہے۔تفصیلات کے مطابق کراچی کے پوش علاقے ڈیفنس خیابان سحر کے ایک بنگلے سے 27 سالہ عمر شہاب کی لاش ملی،عمر شہاب ڈی آئی جی پشاور مظہر شہاب کا بیٹا تھا،پولیس نےعمر شہاب کے محافظ فقیر محمد کو حراست میں لے کر پوچھ گچھ کی تو اس نے سارا قصہ اگل دیا۔پولیس کے مطابق ملزم فقیر محمد نے عمر شہاب سے 2 لاکھ روپے کا تقاضہ کیا،عمر شہاب نے رقم دینے سے انکار کیا تو دونوں میں لڑائی ہو گئی،ملزم فقیر محمد نے عمر شہاب کے گلے میں رسی ڈال کر گلا گھونٹ کر قتل کر دیا،ملزم کو تھانہ درخشان منتقل کر دیا گیا ہے جہاں اس سے مزید تفتیش کی جا رہی ہے۔

لاہور ہائیکورٹ بار کا وزیر اعظم سے مطالبہ ….دھمکی بھی دیدی

لاہور(ویب ڈیسک)لاہور ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن نے پاناما کیس کے فیصلے کے بعد وزیراعظم نواز شریف کے استعفٰٰی کا مطالبہ کرتے ہوئے وکلا تحریک چلانے کی دھمکی دے ڈالی۔ہفتہ کولاہور ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن کے صدر ذوالفقار چوہدری، نائب صدر راشد لودھی، سیکرٹری عامر سعید راں اور فنانس سیکرٹری ظہیر بٹ نے اس حوالے سے ایک پریس کانفرنس کی۔اس موقع پر بار ایسوسی ایشن کے صدر چوہدری ذوالفقار نے کہا کہ اگر وزیراعظم نے ایک ہفتے میں استعفی نہ دیا تو عدلیہ بحالی سے بڑی تحریک چلائی جائے گی۔انہوں نے کہا کہ یہ واحد فیصلہ ہے جس میں سپریم کورٹ کے پانچوں ججز اس ایک نکتے پر متفق ہیں کہ وزیراعظم صادق اور امین نہیں رہے۔ذوالفقار چوہدری کا کہنا تھا کہ ‘پاناما لیکس کے معاملے پر دنیا بھر سے استعفے آئے، مگر وزیراعظم نے ڈھٹائی کا مظاہرہ کیا’۔انھوں نے کہا کہ ‘استعفی کا مطالبہ جائز ہے کیوں کہ ماتحت افسران وزیراعظم کے خلاف غیر جانبدار تحقیقات نہیں کر سکتے’۔بار ایسوسی ایشن کے صدر نے کہا کہ وکلا کے ملک گیر کنونشن کے علاوہ آل پارٹیز کانفرنس بھی منعقد کی جائے گی جس میں آئندہ کا لائحہ عمل طے کیا جائے گا۔اس موقع پر لاہور ہائی کورٹ بار کے نائب صدر راشد لودھی نے کہا کہ پہلی مرتبہ کرپشن سپریم کورٹ کا موضوع بنا اور منی ٹریل پر سپریم کورٹ نے سنجیدہ سوالات اٹھائے جنہیں نظر انداز نہیں کیا جا سکتا۔انہوں نے کہا کہ سپریم کورٹ نے وزیراعظم کا موقف مسترد کر دیا ہے، لہذا اب وہ اپنے عہدے پر رہنے کا اخلاقی جواز کھو چکے ہیں۔دوسری جانب لاہور ہائی کورٹ بار کے سیکرٹری عامر سعید راں کا کہنا تھا کہ 20 اپریل کے فیصلے نے وزیراعظم کے خلاف فرد جرم عائد کی ہے اور فیصلے میں دو ججز نے واضح کردیا کہ وزیر اعظم صادق اور امین نہیں رہے۔